Moawin.pk is an educational web portal which provides a comprehensive platform to Pakistani students, parents, teachers and career seekers.

 

بطور ٹیچر تیار ہونے کے تین بہترین طریقے

بطور ٹیچر تیار ہونے کے تین بہترین طریقے

ٹیچنگ کا شعبہ ایک اچھا اور باوقار شعبہ ہے۔ قرآن کی تعلیمات میں استاد اور ٹیچر کو روحانی باپ تسلیم کیا گیا ہے۔ حضرت علی رضی اللہ تعالی عنہ کا قول مبارک ہے کہ جس نے مجھے ایک لفظ بھی پڑھنا سکھایا وہ میرے نزدیک بہت ہی معتبر ہے۔ جب نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم پر پہلی وحی نازل ہوئی وہ بھی اقراء تھی یعنی پڑھو۔ نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم نے ہمیشہ تعلیم کی اہمیت پر زور دیا تھا۔ آج کے زمانے میں بھی تدریس کا پیشہ بہت با وقار اور باعث عزت سمجھا جاتا ہے۔ اور اس حوالے سے وہ لوگ جو ٹیچنگ یا تدریس کو بطور پیشہ اپنانا چاہتے ہیں تو ان کے اندر اس شعبے کے حوالےسے بہترین قابلیت کا ہونا بہت ضروری ہے کیونکہ وہ ایک نسل کی تربیت کرتے ہیں۔ ہم یہاں بطور ٹیچر تیار ہونے کے حوالے سے کچھ باتوں کا ذکر کریں گے جو کہ امید ہے ان لوگوں کے لیے فائدہ مند ثابت ہو سکتی ہیں جو اس شعبے میں آنا چاہتے ہیں۔

سکول اور ڈسٹرک کی معلومات

اپنے علاقے اور ڈسٹرک کی معلومات حاصل کریں اور اس کے بعد ڈسٹرک میں موجود تمام تر سکولوں کی بھی معلومات حاصل کریں۔ اور یہ دیکھیں کہ تعلیمی نمائش میں کون سے سکول شرکت کر رہے ہیں اور آپ کن سکولوں میں جانے میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ اس کے بعد یہ دیکھیں کہ کون سے سکول ایسے ہیں جن کی ویب سائٹ موجود ہے اور ان کی سائٹ کو وزٹ کریں ان کے مشن سٹیٹمنٹ کے حوالے سے جانیں ان کا تدریسی طریقہ کار، انتظامی امور، اور اس کے علاوہ ان سکولوں میں کون سی آسامیاں خالی ہیں یہ تمام تر باتیں آپ کو فیصلہ کرنے میں آسانی دیں گی۔ اس کے بعد اپنی ترجیحات کے تحت سب سے پہلے ان سکولوں کو وزٹ کریں جن کی تدریسی معیار اچھا ہے۔ اس کے بعد اس بات کو جاننے کی ضرورت ہے کہ ڈسٹرکٹ میں کون سے ایسے سکول موجود ہیں جہاں پر دن کے تمام اوقات میں اساتذہ کے انٹرویوز ہوتے ہیں۔ ایسے سکول زیادہ تر ایونٹس کے انتظامات بھی کرتے ہیں اور اس حوالے سے تفصیلات ویب سائٹ پر موجود ہوتی ہیں۔

اپنا سی وی تیار کریں

ایک بہترین سی وی (کری کولم ویٹائی)(Curriculum Vitae)  تیار کریں۔ اپنے سی وی میں تصویر لگانے کی ضرورت نہیں ہے۔ ایک اچھا سی وہی جو کہ تدریسی شعبہ میں جانے کے حوالے سے تیار کیا گیا ہو آپ کو مقصد کے حصول میں مدد کرتا ہے۔ اپنے سی وی میں تدریس کے شعبے کے حوالے سے مطلوبہ تجربہ شامل کریں جیسا کہ طلباء کو پڑھانے کا تجربہ، کوئی انٹرنشپ، یا بطور ٹیوٹر سروس، کونسلنگ یا سکول کے بعد کسی کلب کی ممبر شپ یا کوئی بھی ایسی کارکردگی جو طلباء کو پڑھانے سے متعلق ہو اس کو اپنے سی وی کا حصہ بنائیں۔ یوں تو آپ کو اپنے ریزیوم میں کسی بھی قسم کا تعارفی پیراگراف ڈالنے کی ضرورت نہیں ہے اگر آپ تدریسی ملازمت کے حوالے سے انٹرویو دینے جا رہے ہیں۔ اگر آپ کسی مخصوص سکول میں ٹیچنگ کے لیے انٹرویو دینے جا رہے ہیں تو سکول آپ کے تدریسی تجربے کو ذیادہ ترجیح دے گا۔ اور اس کے علاوہ سکول انتظامیہ یہ بھی نوٹ کرے گی کہ آپ کی مہارت کس مضمون میں زیادہ ہے جیسا کہ سائنس، میتھس یا انگلش۔

بہترین لباس پہنیں

کہا جاتا ہے کہ فرسٹ امپریشن از لاسٹ امپریشن (First Impression is the Last Impression)  یعنی آپ کی شخصیت جو پہلا اثر چھوڑتی ہے وہی سب کچھ ہے۔ لہذا جب بھی انٹرویو دینے جائیں تو بہترین لباس اور وضع قطع میں جائیں۔ اور اگر آپ کو ٹیچنگ کی ملازمت مل چکی ہے تو بھی ہمیشہ پیشہ وارانہ شخصیت میں نظر آئیں۔ اگر آپ خاتون ہیں تو ایسا لباس پہنیں جو آپ کے گھٹنوں سے نیچے تک ہو یا اگر آپ نے سکرٹ بھی پہنی ہوئی ہے تو اس کی لمبائی گھٹنوں سے نیچے تک ہو۔ یا اگر آپ بلاؤز اور ڈریس پینٹ پہنتی ہیں تو آپ کی شخصیت بہت جازب نظر آئے گی۔ زيادہ تر خواتین شلوار سوٹ اور چادر میں جاذب نظر محسوس ہوتی ہیں۔ بہرحال لباس ایسا پہنیں جوکہ پر کشش بھی ہو اور آرام دہ بھی۔ اگر مردوں کی بات کی جائے تو مرد حضرات زيادہ تر سوٹ میں ملبوس نظر آتے ہیں اور یا پھر زیادہ تر ڈریس شرٹ اور پینٹ یا ٹی شرٹ اور جینز پہننے نظر آتے ہیں۔ بہرحال سارے ہی لباس پروفیشنل نظر آنے کے لیے بہت ہیں۔ اگر مردوں نے پینٹ کوٹ اور ٹائی پہنی ہوئی ہوتی ہے تو وہ اور زیادہ مہذب نظر آتے ہیں۔ بہرحال کہنے کا مقصد یہ ہے کہ لباس چاہے جیسا بھی پہنا ہو اس میں چاہے عورت ہو یا مرد اس کو پر کشش نظر آنا چاہیے۔



Tags

Education , Teacher , Training


Comments




Write for us - www.moawin.pk

© Moawin, All rights reserved
Design & Developed by: Mark1technologies