Moawin.pk is an educational web portal which provides a comprehensive platform to Pakistani students, parents, teachers and career seekers.

 

اپنے لائف سٹائل میں تبدیلی لائیں اور چست و صحت مند رہیں

اپنے لائف سٹائل میں تبدیلی لائیں اور چست و صحت مند رہیں

قدرت الہی نے انسان کا جو نظام بنایا ہے۔ وہ اپنی جگہ بالکل درست ہے۔ مگر انسان بڑا جلد باز واقع ہوا ہے۔ وہ ہر کام جلدی سے نبٹناے کی کوشش کرتا ہے اور سارے نظام کو درہم برہم کر دیتا ہے۔ اب یہی دیکھ لیں کہ اللہ نے دن کام کرنے کو اور رات آرام کرنے کے لیے بنائی ہے۔ لیکن حضرت انسان راؤنڈ دا کلاک (Round the Colck) یعنی بس 24 گھنٹے کام کرو کے مترادف بس مصروف ہے جس کی وجہ سے یہ سارا نظام بگڑ جاتا ہے۔ زیادہ سے زیادہ پیسہ کمانے کی دھن نے انسان کو اخلاقی، تہذیبی قدروں میں پست کر دیا ہے اور اس کے ساتھ ہی ساتھ صحت کے کئی مسائل نے بھی انسان کو گھیر رکھا ہے۔ ان میں ایک قدرتی مرض تھکن ہے۔ یعنی جب انسان سارا دن کام کرتا ہے اور کچھ دیر کے لیے بھی آرام نہیں کرتا تو اس کی وجہ سے نہ صرف ذہن صحیح طریقے سے کام نہیں کرتا بلکہ جسم کے دیگر اعضاء بھی اس چیز سے متاثر ہوتے ہیں۔ تھکن کو مرض کے دائرے میں لانا شاید صحیح نہیں ہو گا۔ مگر مسلسل بے آرامی اور تھکن بالآخر بہت سے امراض کا پیش خیمہ ثابت ہو جاتی ہے۔ اگر آپ بے آرامی کا شکار ہو جاتا ہیں اور ہر وقت تھکن محسوس کرتے ہیں تو اس کی کئی وجوھات ہو سکتی ہیں۔ لیکن ماہرین صحت کے نزدیک تھکن ہونے کی جو بڑی وجوھات ہیں ان پر اگر مناسب طریقے سے قابو پا لیا جائے تو تازگی بھری بھرپوری زندگی حاصل کی جا سکتی ہے۔

اگر آپ شکر کا بہت ذیادہ استعمال کرتے ہیں تو نہ صرف وہ شکر بلکہ سفید ڈبل روٹی، چاول اور چپس وغیرہ کی مٹھاس بھی آپ کے لیے نقصان دن ثابت ہو سکتی ہے۔ اس لیے ماہرین کا کہنا ہے کہ تھکاوٹ سے بچنے کے لیے ان چیزوں کے استعمال میں احتیاط برتنے کی ضرورت ہے۔ جبکہ توانائی کے لیے گندم جو اور دیگر اشیاء کا استعمال بڑھانے کی ضرورت ہے۔  نیند نہ صرف جسم کی ٹوٹ پھوٹ کو درست کرتی ہے بلکہ دماغ کے افعال کو منظم رکھنے کے لیے بھی بہت ضروری ہے۔ اسی لیے اپنی نیند کا جائزہ لینا چاہیے کہ وہ آپ کے لیے کتنی ضروری ہے۔ کم سے کم سات گھنٹے کی نیند انسانی جسم کے لیے بہت ضروری ہوتی ہے۔ اور ساتھ ہی ورزش کو بھی اپنا معمول بنائیں کیونکہ چست اور توانا رہنے کے لیے اس سے بہتر کوئی شے نہیں ہے۔ ماہرین صحت کے نزدیک ورزش سے دماغ میں خاص کیمیکل خارج ہوتے ہیں جو خوشگوار اثرات مرتب کرتے ہیں۔ اور اس سے نیند کا معیار بھی بہتر ہو جاتا ہے۔

صبح کا ناشتہ دن بھر کی مشقت کے لیے توانائی فراہم کرتا ہے۔ اس کے بغیر بدن کو توانائی نہیں ملتی اور دن بھر تھکاوٹ کا احساس طاری رہتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ توانا اور چست رہنے کے لیے ناشتہ اطمینان اور متوازن خوراک کے ساتھ کرنا چاہیے۔ جبکہ ناشتہ میں دودھ ، جوس، پھل، انڈے اور مغزیات وغیرہ روز مرہ کی بھاگ دوڑ کے لیے مناسب توانائی فراہم کرتے ہیں۔ دیر تک بیٹھے رہنا صحت کے اچھا نہیں ہے۔ مثلا ایک گھنٹے تک بیٹھنے سے دل پر اثر پڑتا ہے۔ اور ساتھ ہی دوران خون بھی سست پڑتا ہے۔ جبکہ جسم میں آکسیجن کی کمی بھی واقع ہوتی ہے۔ اسی لیے تھوڑی دیر کرسی چھوڑ کر چہل قدمی کرنا بہتر ہوتا ہے۔ اس سے نہ صرف آپ تھکاوٹ کا شکار نہیں ہوں گے۔ بلکہ اس عمل سے خون کا دورانہ بہتر رہے گا۔ جس سے دماغ کو آکسیجن ملے گی اور آپ چست و پھرتیلے رہیں گے۔  اگر آپ کیفین کا زیادہ استعمال کرتے ہیں تو یہ بھی تھکاوٹ اور کاہلی کی ایک وجہ ہے کیونکہ کافی اور سافٹ ڈرنکس وغیرہ کا استعمال آپ میں وقتی چستی تو پیدا کرتے ہیں لیکن ان چیزوں کی زیادتی اچھے اثرات مرتب نہیں کرتی جبکہ دوپہر کے اوقات میں کافی کا زیادہ استعمال رات کی نیند کو متاثر کرتا ہے۔

پانی انسانی صحت کے ضروری اور بنیادی چیز ہے۔ اس سے آپ کی فعالیت اور تازگی برقرار رہتی ہے۔ جبکہ اس کی تھوڑی سی کمی بھی توانائی اور توجہ کو متاثر کرتی ہے۔ ماہرین صحت کے مطابق ایک انسان کو 24 گھنٹوں میں ایک سے ڈیڑھ لیٹر پانی ضرور پینا چاہیے اور گرمیوں کے موسم میں اس سے زیادہ پینا چاہیے کیونکہ انسانی جسم سے زہریلے مواد پسینہ کی صورت خارج ہو جاتے ہیں اور جسم میں نمکیات کی کمی واقع ہوتی ہے اس لیے پانی کا زیادہ استعمال کرنا چاہیے۔ پانی کا زیادہ سے زیادہ استعمال آپ کو توانا اور چست رکھتا ہے اس لیے ہر گھنٹے بعد یا ایک گھنٹے میں دو گلاس پانی ضرور پینا چاہیے۔ چلنے پھرنے اور اٹھنے بیٹھنے کے انداز بھی باڈی لینگویج پر اثر انداز ہوتے ہیں۔ جس سے آپ پر تھکاوٹ طاری ہوتی ہے۔ اس لیے اگر آپ کندھے سکیڑ کر دھیرے دھیرے چل رہے ہیں تو یہ نہ صرف تھکاوٹ بلکہ پریشانی کو بھی ظاہر کرتا ہے۔ چلتے وقت اپنا انداز با وقار رکھیں اس سے آپ جلد نہیں تھکیں گے جبکہ خود کو توانا محسوس کریں گے۔



Tags

Health , Healthcare


Comments




Write for us - www.moawin.pk

© Moawin, All rights reserved
Design & Developed by: Mark1technologies